289

جن کاموں سے روزہ نہیں ٹوٹتا

وہ کام جو روزے میں کیے جاسکتے ہیں اور ان سے روزہ نہیں ٹوٹتا، یہ ہیں:

?? *سرمہ یا کاجَل لگانا ۔*

?? *خوشبو لگانا ۔*

?? *خوشبو سونگھنا ۔*

?? *تیل لگانا ، خواہ سر پر ہو یا جسم پر ۔*

?? *مسواک کرنا ،خواہ تَر (تازی) ہو یا سوکھی ، صبح ہو یا شام کو ، سب جائز ہے ۔*

?? *ناخن تراشنا ۔*

?? *بال کاٹنا ، خواہ سر کے ہوں یا بغل اور ناف کے نیچے وغیرہ کے۔*

?? *منہ کا تھوک نگل لینا ، البتہ جان بوجھ کر منہ میں جمع کرکے نہیں نگلنا چاہیئے۔*

?? *غسل کرنا ، خواہ ناپاکی کا ہو یا ٹھنڈک حاصل کرنے کیلئے ،جائز ہے ۔*

*(البتہ روزے کی حالت غرارہ اور ناک میں زیادہ اوپر تک پانی نہ ڈالے ۔)*

?? *خون ٹیسٹ کروانا، البتہ اتنا خون نہ نکلوائیں کہ کمزوری غالب آجائے ۔*

?? *انجکشن یا ٹیکہ لگوانا ۔*

?? *ضرورت ہو تو روزہ کی حالت میں گلوکوز بھی چڑھوائی جا سکتی ہے ۔*

?? *آنکھ میں دوائی ڈالنا، اگرچہ اس کا ذائقہ حلق میں محسوس ہو ۔*

*(البتہ ناک یا کان میں دوائی نہیں ڈالنی چاہیئے ۔)*

?? *روزہ کی حالت میں بیوی کا بوسہ لینا جائز ہے بشرطیکہ جماع (ہمبستری) یا اِنزال (منی نکلنے) کا اندیشہ نہ ہو، ورنہ منع ہے ۔*

?? *میاں بیوی کا ساتھ لیٹنا ، ایک دوسرے کوہاتھ لگانا ،بشرطیکہ ہم بستری میں مبتلا ہونے کا اندیشہ نہ ہو تو جائز ہے ، ورنہ منع ہے۔*

? *{(از کتب الفقہ)}*?

*مفتی محمد بلال شیخ*

??دارالافتاء والارشاد،باندرہ، ممبئی، مہاراشٹر ??

????????????

p.p1 {margin: 0.0px 0.0px 0.0px 0.0px; text-align: right; font: 12.0px ‘.Noto Nastaliq Urdu UI’; color: #454545}
p.p2 {margin: 0.0px 0.0px 0.0px 0.0px; text-align: right; font: 12.0px ‘Helvetica Neue’; color: #454545; min-height: 14.0px}
p.p3 {margin: 0.0px 0.0px 0.0px 0.0px; text-align: right; font: 12.0px ‘.Apple Color Emoji UI’; color: #454545}
span.s1 {font: 12.0px ‘Helvetica Neue’}
span.s2 {font: 12.0px ‘.Apple Color Emoji UI’}

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں