ڈاکٹر عبدالقدیر خان وفات پا گئے

پاکستان کے معروف ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر خان 85 سال کی عمر میں اتوار کے روز صحت بگڑنے کی وجہ سے ہسپتال میں انتقال کر گئے ہیں، انہیں پاکستان کے ایٹمی پروگرام کا بانی سمجھا جاتا ہے اور مسلم دنیا کا پہلا ایٹم بم بنانے پر مسلم ممالک انہیں ایک ہیرو کے طور پر عزت اور احترام دیتے ہیں۔

ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی طبیعت ہفتہ کی رات اس وقت خراب ہونا شروع ہوئی جب انہیں سانس کی تکلیف شروع ہوئی، انہیں اتوار کی صبح 6 بجے ایک ایمبولینس کے ذریعے آر ایل ہسپتال لایا گیا، ڈاکٹرز نے انکی جان بچانے کی پوری کوشش کی لیکن بدقسمتی سے انکے پھیپھڑوں سے خون بہنا شروع ہوگیا جسے کنٹرول کرنا مشکل ہوگیا اور وہ صبح 7:04 پر چل بسے۔ ڈاکٹروں نے کہا ہے کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان پھیپھڑوں سے خون بہنے کی وجہ سے انتقال کر گئے ہیں۔

ہسپتال انتظامیہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی میت کو ان کی رہائش گاہ E-7 پر منتقل کرنے کے انتظامات کرنے کی کوشش کر رہی ہے جبکہ ان کے اہل خانہ نے بتایا ہے کہ ان کی نماز جنازہ اسلام آباد کی فیصل مسجد میں سہ پہر ساڑھے تین بجے ادا کی جائے گی۔

اردونامہ ڈاٹ ای یو کی طرف سے انکی وفات پر گہرے رنج اور الم کا اظہار کیا جاتا ہے اللہ انکی مغفرت فرمائے اور انہیں جنت میں جگہ عطا فرمائے آمین!